(+92) 0317 1118263

نماز جنازہ

عورتوں کے مردوں کے ساتھ ملکرنمازجنازہ اداکرنا

عورتوں کے مردوں کے ساتھ ملکرنمازجنازہ اداکرنا فتوی نمبر: 33246

الاستفتاء

عورتوں کا مردوں کے بیچ نمازِ جنازہ پڑھنا کیسا ہے؟

الجواب حامدا و مصلیا

عورتوں کا مردوں کے بیچ نمازِ جنازہ پڑھنا درست نہیں۔


فی الدر المختار: (ویکرہ حضورہن الجماعۃ) ولو جمعۃ وعید ووعظ (مطلقا) ولو عجوزا لیلا (علی المذہب) المفتی بہ لفساد الزمان الخ (ج۱، ص۵۶۶)۔


وفی الشامیۃ: تحت (قولہ ولو عجوز الیلا) بیان للاطلاق: أی شابۃ أو عجوزا نہارا أو لیلا الخ (ج۱، ص۵۶۶)۔


وفی الفقہ الاسلامی وأدلتہ: اتفق الفقہاء منہم الحنفیۃ والمالکیۃ علی أنہ لا یرخص للشابات من النساء الخروج إلی الجمعۃ والعیدین وشیء من الصلوات لقولہ تعالیٰ ﴿وقرن فی بیوتکن﴾ والأمر بالقرار نہی عن الانتقال ولأن خروجہن سبب الفتنۃ بلا شک، والفتنۃ حرام، وما أدی إلی الحرام فہو حرام الخ (ج۲، ص۳۶۵)۔ واللہ اعلم