(+92) 0317 1118263

احکام وراثت

بھائیوں کا مرحوم والد کے ترکہ میں سے بہن کو حصہ نہ دینا

بھائیوں کا مرحوم والد کے ترکہ میں سے بہن کو حصہ نہ دینا فتوی نمبر: 28436

الاستفتاء

میرے سسر زندہ نہیں ہیں، میری بیوی نے اپنے والدکی جائیداد سے اپنے حصہ کا مطالبہ کیا ہے، لیکن اس کی والدہ اس کی مدد کرنے سے انکار کررہی ہے، ایسے میں میری بیوی کو کیا کرنا چاہیے اور اس کا کیا کردار ہونا چاہئے؟

الجواب حامدا و مصلیا

سائل کی بیوی اپنے والد مرحوم کے ترکہ سے اپنا حصہ مانگنے میں حق بجانب ہے اس سلسلہ میں سائل کی ساس کو بھی تعاون کرنا چاہئے تاہم خاندان کے بڑوں کو بیچ میں ڈال کر دیگر ورثاء کو بھی تقسیم ترکہ آمادہ کیا جاسکتا ہے ، بصورتِ دیگر سائل کی بیوی اپنے حق کی وصولیابی کیلئے قانونی چارہ جوئی کی بھی مجاز ہے۔


قال اللہ تعالیٰ: ﴿یوصیکم اللہ فی اولادکم للذکر مثل حظ الانثیین﴾ الآیۃ (النساء:۱۱)


وفی مشکاۃ المصابیح: وعن ابی ہریرۃ الرقاشی عن عمہ قال: قال رسول اللہ ـ صلى الله عليه وسلم ـ ألا لا تظلموا ألا لا یحل مال امرئ إلا بطیب نفس منہ۔ الخ (ج۱، ص۵۵)۔ واللہ اعلم