(+92) 0317 1118263

عرس و میلاد

عورتوں کاگھرمیں جمع ہوکر محفل میلاد منعقدکرنا

عورتوں کاگھرمیں جمع ہوکر محفل میلاد منعقدکرنا فتوی نمبر: 26906

الاستفتاء

آج کل ایک رسم بن چکی ہے کہ محلے کی عورتیں ایک گھر میں اکھٹے ہوکر میلاد کی محفل سجاتی ہیں، اور ان کی آواز پورے محلے میں سناتی ہیں، کیا میلاد کا یہ طریقہ جائز ہے؟

الجواب حامدا و مصلیا

مذکور طریقے سے عورتوں کا جمع ہونا ، محفل میلاد سجانا اور نعت خوانی وغیرہ کی آوازیں بلند کرنا بدعت اور ناجائز ہےجس سے احتراز لازم ہے۔


کما في صحیح مسلم: عن جابر بن عبدالله، قال: كان رسول الله ـ صلى الله عليه وسلم ـ إذا خطب احمرت عيناه،(إلى قوله ـ عليه السلام ـ )وشر الأمور محدثاتہا وکل بدعۃ ضلالۃ۔ (رقم الحدیث: ۸۲۶) واللہ اعلم!